پل دو پل کو سامنے آو

Right-and-duties

*پل دو پل کو سامنے آؤ*
انتخابی اصلاحات پر بھی بات هوتی هے. جلسے ,جلوس اور کارنر میٹنگ بھی انعقاد پذیر هوتے هیں.کارکنوں کو متحد رکھنا بھی ضروری هے.کیا کسی بھی عوامی نمائنده جماعت کو همارے گھر کی فکر هے?میرے حلقے میں کتنی کرپشن هے,میری یونیں کونسل میں کیا هورها هے.
یار مجھے پانامه سے کیا غرض اگر میری یونیں کونسل میں پچھلے ستر سال سے سارے بے داغ دامن والے نمائندے هیں.اگر نهیں هیں تو ان کو انصاف کے کٹهرے میں کھڑا کرو,تب مانوں گا

کچھ دنوں میں شخصیات کارڈ بانٹیں گی. بینر لگیں گے. ڈھول بجے گا. الغرض سیاسی دنگل سجے گا اور جونهی انتخابی بین بجے گی تو هر وه سیاسی جاندار جو ناپید لگ رها تھا. جھومتا هوا سامنے آۓ گا.
آج اگر کسی کو اس “عوامی نمائندے” کا علم هے تو خدارا!
پتا بتا دو? یا اسے که دو
*پل دو پل کو “سامنے آؤ”*
میری یونین کونسل کے نمائندے کا دل کرتا هے که اسے بھی پارلیمنٹ کے پاس کوئی سیاسی دکان(ریڑھی) چلانے دی جاۓ.کیونکه یونین کونسل اس کے شایان شان جگه نهیں هے.
کیونکه یونین کونسل میں بیٹھ کر حفاظتی ٹیکے لگانے والے مکمل صحت بخش ماحول میں معصوم انسانوں کی خدمت میں مصروف هیں.
کیا تمام سرگرمیاں صرف اسلام آباد کے لیے هیں?یار کوئی انهیں بتاو کهه یونین کونسل میں بیٹھو تم یهاں کے نمائندے هو. اور حزب مخالف کا هر کارکن جیسے دفاعی مورچے پر نصب توپ هو . اسے فکر نهیں هے کهه میری یونین کونسل ,میرے حلقے میں تجاوزات بڑھ رهے هیں, بنیادی ضروریات زندگی کا فقدان هے…..
بڑی سیاسی جماعتوں کے نمائندے تو ٹھرے طاقتور اور وڈیرے ان سے تو سوال جان کا وبال.
چھوٹے چھوٹے کونسلر اپنی کونسلری کا فائده یوں اٹھا رهے هیں که:
کوئی مکان بنا کر بیچ رها هے.
کوئی کاروباری سرگرمیوں میں فائدے حاصل کر رها هے.
اور جنهوں نے نمازی اور خشیت الهی رکھنے والوں سے ووٹ وصول کیا تھا وه پھر سے مساجد میں خطبے دے رهے هیں. جنازے پڑھ رهے هیں اور کبھی کھبار کوئی مذمتی بیان داغ دیتے هیں.
ارے! پارلیمنٹ میں تمهاری جماعت کے نمائندے موجود هیں ناں?
تو بھائی وه اسلام آباد میں کام کر لیں گے بھروسه رکھو

You-can-stop-corruption-e1472832571329

تم اپنے حلقے,اپنی یونین کونسل میں کام کرو. یهاں پر اپوزیشن کا کردار نبھاو. یهاں کے تعلیمی اداروں کا دوره کرو,یهاں کی مساجد(بلاتفریق) کو دیکھو,اپنی یونین کونسل کی کاروباری اور سیاسی مصروفیات بناو.
پھر اسلام آباد والوں کی مدد کرنے چلے جانا. یار یهاں بھی پانی کی سکیمیں هیں ,ترقیاتی کام هو رهے هیں. کرپشن هونے کے بعد لکیر پیٹنے والو!
موجوده منصوبوں میں کرپشن کو کم از کم مشکل هی بنادو.
یار عوام کو ان کے حقوق سے آگاه هی کردو.
میرے گھر سے البراک کا کارنده جب کوڑا نهیں اٹھاتا تو مجھے کیا کرنا هے.
اگر الله نے تمهیں شعور و آگهی عطا کی هے تو اسے معاشرے کی فلاح پر لگاو.ان لوگوں کو حق شناس کرو جو فکر معاش کے نیچے دب کر سسک رهے هیں.
اٹھو!
للکارنا هے نا تو, اپنے محلے کی گندگی کو للکارو. تمهیں شکست دینی هے ناں! گلیوں میں چلتے پھرتے موت کے سوداگروں کو دو. جو منشیات کا زهر نئی نسل کی رگوں میں اتار رهے هیں.
پانامه پر سوچو ضرور آخر تم سیاسی شخص هو.
مگر مجھے میری یونین کونسل کو مثالی بنادو. میرے بچے تعلیم ,تفریح,صحت اور کھیل کود سے محروم هیں. اس کے لیے سوال اٹھادو.
*پل دو پل کو سامنے آو*
#انسانیت
#حق_شناس
#درد_نویس

(نوید شاکر )

3 thoughts on “پل دو پل کو سامنے آو

Leave a Reply to Uzma Cancel reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s